فلسطین میں انتخابات ملتوی کیے جانے کے خلاف سخت احتجاج

فلسطین میں انتخابات ملتوی کیے جانے کے خلاف سخت احتجاج

فلسطین میں انتخابات ملتوی کئے جانے کے خلاف مظاہرے شروع ہو گئے ہیں۔

اہل بیت(ع) نیوز ایجنسی۔ابنا۔ المیادین کی رپورٹ کے مطابق غزہ اور غرب اردن  سمیت فلسطین کے کئی علاقوں میں آج بروز جمعہ انتخابات ملتوی کئے جانے کے خلاف احتجاجی مظاہرے شروع ہو ئے ۔ ان مظاہروں میں فلسطینیوں نے انتخابات کرانے، قبلہ اول کی آزادی اور استقامتی محاذ کے حق میں نعرے لگائے۔

دوسری جانب حماس نے آج ایک بیان جاری کرکے فلسطین کے انتخابات ملتوی کئے جانے کو کودتا قرار دیتے ہوئے کہا کہ اس کی ذمہ داری فتح اور فلسطینی اتھارٹی پر عائد ہوتی ہے۔

حماس نے اس بیان میں کہا کہ جس طرح قدس میں غاصب صیہونی حکومت پر اپنی پالیسیوں اور فیصلوں کے حوالے سے اپنی استقامت اور توانائی ثابت کی اسی طرح انتخابات کے انعقاد کیلئے بھی اس حکومت پر دباو ڈال سکتے ہیں ۔

اس سے قبل فلسطینی گروہوں نے اعلان کیا تھا کہ فلسطین کی قانون ساز اسمبلی کے انتخابات کی راہ میں پائی جانے والی رکاوٹوں اور مسائل و مشکلات کے باوجود وہ اس بات کے حق میں نہیں ہیں کہ ان انتخابات کو ملتوی کیا جائے۔

یاد رہے کہ فلسطینی اتھارٹی کے سربراہ محمود عباس نے آج علی الصبح فلسطین کے انتخابات ملتوی کئے جانے کا اعلان کیا ۔

فلسطین کے پارلیمانی انتخابات 15 سال کے بعد 22 مئی صدارتی انتخابات 31 جولائی اور قومی کونسل کے انتخابات 31 اگست 2021 کو منعقد ہونے والے تھے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

۲۴۲


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*