سعودی عرب کے بہیمانہ جرائم پر اقوام متحدہ خاموش، صنعا کی کڑی نکتہ چینی

سعودی عرب کے بہیمانہ جرائم پر اقوام متحدہ خاموش، صنعا کی کڑی نکتہ چینی

یمنی پارلیمنٹ کے نمائندوں نے صوبہ صعدہ میں عام شہریوں کے خلاف سعودی فوجیوں کے بہیمانہ جرائم کی مذمت کی ہے۔

اہل بیت(ع) نیوز ایجنسی۔ابنا۔ المسیرہ ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق یمن کے ممبران پارلیمنٹ نے ملک کے شمالی علاقے میں عوام کے خلاف سعودی فوجیوں کے وحشیانہ جرائم اور تشدد پر اقوام متحدہ کی خاموشی کی مذمت کرتے ہوئے انسانی حقوق کے اداروں سے ذمہ داروں کو قرار واقعی سزا دینے کا مطالبہ کیا ہے۔

اس بیان میں کہا گیا ہے کہ الرقو میں مہاجرین اور عام شہریوں کے خلاف بدترین جرائم کا ارتکاب اور جارحین کے ترجمان کی جانب سے اس کی تردید، سعودی حکومت کی پستی اور درندگی کی قلعی کھول دیتی ہے۔

یمن کے ممبران پارلیمنٹ نے اپنے بیان میں انسانی حقوق کے اداروں سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ ان جرائم کے دستاویزات تیار کرنے اور ذمہ داروں کو عالمی عدالت میں پیش کرنے کے سلسلے میں اپنا کردار ادا کرے۔

یمن کی وزارت صحت نے اعلان کیا ہے کہ صوبہ صعدہ کے الرقو علاقے میں سعودی فوجیوں نے پچیس یمنی شہریوں پر وحشیانہ تشدد کیا ہے جس کے نتیجے میں سات افراد اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں۔ سعودی جارحین نے ان یمنی شہریوں کو کرنٹ اور واٹر بورڈنگ کے ذریعے وحشیانہ تشدد کا نشانہ بنایا۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

242


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*