بلخاب پر طالبان کی لشکر کشی، ہزارہ قوم کے خلاف اعلان جنگ ہے : حزب وحدت اسلامی

بلخاب پر طالبان کی لشکر کشی، ہزارہ قوم کے خلاف اعلان جنگ ہے : حزب وحدت اسلامی

افغانستان کی حزب وحدت اسلامی کے سربراہ نے ہزارہ قوم سے تعلق رکھنے والے طالبان کے کمانڈر کے خلاف صوبہ سرپل کے بلخاب ضلع پر طالبان کی کارروائی پر انتباہ دیا ہے۔

اہل بیت(ع) نیوز ایجنسی۔ابنا۔ افغانستان کی شفقنا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق حزب وحدت اسلامی کے سربراہ محمد محقق نے صوبہ سرپل کے ضلع بلخاب پر چاروں طرف سے طالبان کی لشکرکشی کو ہزارہ قوم کے خلاف اعلان جنگ قرار دیتے ہوئے اس کے نتائج کے بارے میں خبردار کیا ہے۔

محمد محقق نے کہا کہ عقلمندی کا تقاضا یہ ہے کہ بلخاب کو جنگ میں نہ الجھایا جائے اور طالبان کو اس گروہ کے واحد ہزارہ کمانڈر مولوی مہدی مجاہد کے ساتھ اپنے داخلی مسائل، مذاکرات کے ذریعے حل کرنے چاہئیں۔

حزب وحدت اسلامی کے سربراہ نے کہا کہ افغانستان کی طالبان حکومت، ایک طرف اپنی سیاسی شبیہہ بہتر بنانے کے لئے کمیشن تشکیل دیتی ہے اور دوسری جانب اپنی صفوں سے نسلی صفایا جاری رکھے ہوئے ہے۔ افغانستان کی آبادی چودہ سے زیادہ مختلف نسلوں پر مشتمل ہے اور اس ملک میں نسلی اختلافات ہمیشہ ہی خونریز جھڑپوں کا باعث بنتے رہے ہیں جو حکومتوں کے لئے سنگین چیلنج سمجھے جاتے رہے ہیں۔

واضح رہے کہ ہزارہ قوم سے تعلق رکھنے والے طالبان کے واحد کمانڈر مولوی مجاہد نے کہا تھا کہ طالبان انتظامیہ افغانستان کی شیعہ ہزارہ قوم کے ساتھ سوتیلا سلوک کررہی ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

242


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*