?>

اہل بیت(ع) عالمی اسمبلی کے سیکرٹری جنرل کی یمن اور برما کے مسلمانوں کے لیے امداد کی اپیل

اہل بیت(ع) عالمی اسمبلی کے سیکرٹری جنرل کی یمن اور برما کے مسلمانوں کے لیے امداد کی اپیل

انہوں نے آخر میں کہا کہ ہم نے ایران کے مختلف شہروں کے عمومی مراکز جیسے مساجد، میٹرو اسٹیشنز وغیرہ وغیرہ پر امداد حاصل کرنے کے لیے صندوقچہ لگا دئے ہیں جبکہ بنکوں میں اکاؤنٹ بھی کھول دئے ہیں۔

اہل بیت(ع) نیوز ایجنسی۔ابنا۔ اہل بیت(ع) عالمی اسمبلی کے سیکرٹری جنرل نے ایک پریس کانفرنس کے دوران یمن کے مظلوم عوام پر گزشتہ دو سال سے زیادہ عرصے سے جاری ظلم و ستم کی داستان کو دھراتے ہوئے کہا کہ آل سعود کے شجرہ ملعونہ نے تاھم ہزاروں بے کس و مظلوم یمنیوں کو شہید کر دیا اس ملک کے تمام بنیادی ڈھانچوں؛ ہسپتالوں، اسکولوں، کھیتی باڑی کے مراکز کو نابود کر دیا ہے اور اس ملک کے عوام شدید قحط اور بحران کا شکار ہیں۔
حجت الاسلام و المسلمین محمد حسن اختری نے یمن میں پیش آنے والے انسانی المیہ کی طرف اشارہ کیا اور مزید کہا: دوسری جانب سے ہیضہ کی بیماری نے اس ملک کو اپنی لپیٹ میں لے لیا ہے اور بہت سارے بچے اس بیماری کی وجہ سے لقمہ اجل بن چکے ہیں جبکہ عالمی انسانی حقوق کی تنظیمیں اس ظلم و ستم کو دیکھ کر خاموش بیٹھی ہیں ایسے عالم میں امت مسلمہ کی ذمہ داری ہے کہ وہ آگے بڑھیں اور ان بے سہارا مسلمانوں تک اشیائے خورد و نوش و دوا پہنچانے کی کوشش کریں۔
انہوں نے برما کے مسلمانوں پر بھی بودھسٹوں کی طرف سے جاری ظلم کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ اس ملک کے مسلمان بھی ناقابل بیان حالات سے دوچار ہیں بودھسٹوں نے جس بے دردی اور درندگی سے انہیں ٹکڑے ٹکڑے کیا ہے وہ نہ قابل دید ہے نہ قابل بیان، اس تشدد کی وجہ سے ہزاروں کی تعداد میں مسلمان بے گھر، سینکڑوں بچے یتیم، اور عورتیں بیوہ ہوئی ہیں۔ عالمی انسانی حقوق کی تنظیمیں اور بین الاقوامی ادارے اس ظلم و تشدد کے مقابلے میں تاہم نہ کچھ کہہ سکے نہ پناہ گزینوں کے سر چھپانے کے لیے کوئی انتظام کر سکے ہیں۔
حجۃ الاسلام و المسلمین اختری نے کہا: ایرانی عہدہ دار کوشش کر رہے  ہیں کہ بنگلادیش کی سرحد پر ایک عارضی ہسپتال قائم کر کے پناہ گزینوں کے علاج و معالجہ کا انتظام فراہم کر سکیں نیز اس وقت ان کے پاس خورد و نوش کے لئے اشیائے خوردنی موجود نہیں ہیں کچھ پکانے کے لیے وسائل فراہم نہیں ہیں ایسے حال میں ضروری ہے کہ مسلمانان عالم آگے بڑھیں اپنی شرعی اور انسانی ذمہ داری کا احساس کرتے ہوئے ان بے سہارا لوگوں کے لیے کچھ کریں۔
انہوں نے آخر میں کہا کہ ہم نے ایران کے مختلف شہروں کے عمومی مراکز جیسے مساجد، میٹرو اسٹیشنز وغیرہ وغیرہ پر امداد حاصل کرنے کے لیے صندوقچہ لگا دئے ہیں جبکہ بنکوں میں اکاؤنٹ بھی کھول دئے ہیں جو افراد بھی اپنی امداد یمن اور برما کے مظلوم مسلمانوں تک پہنچانا چاہتے ہیں مذکورہ طریقوں سے اپنی امداد پہنچا سکتے ہیں۔


یمن کے مظلوم لوگوں کی مدد کے لیے بینک اکاؤنٹ نمبر:
بینک ملی:0113130000006

برما کے مظلوم مسلمانوں کی مدد کے لیے اکاؤنٹ نمبر:
بینک ملی: 0111424815009

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

۲۴۲


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*

مغربی ممالک میں پیغمبر اکرم (ص) کی توہین کی مذمّت
ویژه‌نامه ارتحال آیت‌الله تسخیری
پیام رهبر انقلاب به مسلمانان جهان به مناسبت حج 1441 / 2020
حضـرت ابــوطالب (ع) حامی پیغمبر اعظـم (ص) بین الاقوامی کانفرنس
ہم سب زکزاکی ہیں / نائیجیریا کے‌مظلوم‌شیعوں کے‌ساتھ اظہار ہمدردی