افغانستان میں ہماری جنگ، طالبان سے التجا کے ساتھ اختتام پذیر: امریکی تجزیہ نگار

افغانستان میں ہماری جنگ، طالبان سے التجا کے ساتھ اختتام پذیر: امریکی تجزیہ نگار

امریکا کے ایک مشہور تجزیہ نگار کا کہنا ہے کہ افغانستان میں ہماری جنگ، طالبان سے التجا کے ساتھ ختم ہوگئی۔

اہل بیت(ع) نیوز ایجنسی۔ابنا۔ امریکا کے مشہور تجزیہ نگار اور پروفیسر مکس آبرامز نے افغانستان میں 20 سالہ امریکی مداخلت کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ یہ جنگ، طالبان سے واشنگٹن کی التجا کے ساتھ ختم ہوگئی۔

امریکی یونیورسٹی کے پروفیسر اور مشہور تجزیہ نگار مکس آبرامز نے دہشت گردی سے مقابلے کے بہانے افغانستان پر حملے اور 20 سالہ جنگ کی شدید الفاظ میں مذمت کی۔

امریکا کے سینئر تجزیہ نگار مکس آبرامز خارجہ تعلقات کونسل کے رکن اور مشہور تھنک ٹینک میں بھی اپنی خدمات انجام دے چکے ہيں۔ انہوں نے ٹوئٹ کر افغانستان کے بارے میں بائیڈن حکومت کے موقف کی مذمت کی۔

وہ اس سے پہلے بھی شام، عراق، افغانستان اور دیگر علاقوں میں امریکا کی توسیع پسندانہ جنگ اور مداخلت آمیز پالیسیوں کی مذمت کرتے رہے ہيں۔

انہوں نے اپنے نئے ٹوئٹ میں کہا کہ واشنگٹن کا معاملہ، طالبان سے التجا تک پہنچ گیا۔

انہوں نے ٹوئٹ کیا کہ بیس سال پہلے امریکا نے طالبان سے اسامہ بن لادن کی حوالگی کی اپیل کرتے ہوئے اس ملک کے خلاف جنگ کا آغاز کر دیا تھا جبکہ جنگ کا خاتمہ، طالبان سے التجا کے ساتھ ہوا تاکہ وہ انخلاء میں ہماری مدد کریں اور خونخوار دہشت گرد گروہ داعش سے ہمارا دفاع کریں۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

۲۴۲


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*