• ماہ مبارک رمضان؛ 30 دن، تیس پیغامات - 11

    رسول اللہ (صلی اللہ علیہ و آلہ) نے فرمایا: اپنی خواہشوں کو کم کرو اور موت کو نصب العین قرار دو (اور ہمیشہ مد نظر رکھو)، اور خداوند متعال سے اس طرح سے شرم و حیا کرو، جیسا کہ اس کا حق ہے۔ میں نے عرض کیا: ہم سب اللہ سے شرم و حیا کرتے ہیں۔

    مزید ...
  • ماہ مبارک رمضان؛ 30 دن، تیس پیغامات - 10

    ایک دن انس امام حسن مجتبی (علیہ السلام) کی خدمت میں حاضر تھے، کہ اسی اثناء میں امام کی کنیزوں میں سے ایک کنیز داخل ہوئی اور پھولوں کی ڈالی آپ کی خدمت میں پیش کی۔ امام پھولوں کی ڈالی وصول کرکے مسکرائے اور فرمایا: "تم آزد ہو"۔

    مزید ...
  • ماہ مبارک رمضان؛ 30 دن، تیس پیغامات - 9

    توکل کے معنی یہ نہیں ہیں کہ تم کچھ بھی نہ کرو، اپنے وجود کی قوتوں کو معطل رکھو اور ایک کونے میں بیٹھ کر اور خدا پر اعتماد و توکل کے نعرے لگاؤ اور امید رکھو کہ خدا خود ہی تمہارے فرائض انجام دے گا! کام کاج اور چلنے پھرنے سے اجتناب اور ساکن اور متوقف ہونے کی صورت میں کامیابی کی کوئی ضمانت نہیں ہے

    مزید ...
  • ماہ مبارک رمضان؛ 30 دن، تیس پیغامات - 7

    جو بھی گروہ اللہ کی یاد کے لئے مجلس بپا کرے ایک منادی آسمان سے ندا دیتا ہے کہ [اے مجلس کے شرکاء] اٹھو، میں نے تمہارے گناہوں کو حسنات (نیکیوں) میں تبدیل کیا اور تم سب کو بخش دیا"۔

    مزید ...
  • ماہ مبارک رمضان؛ 30 دن، تیس پیغامات - 6

    منقول ہے کہ ایک دن چار افراد نے ایک تابوت کو اپنے کندھوں پر اٹھایا ہؤا تھا اور اسے لوگوں کی بھیڑ میں سے گذار رہے تھے اور لوگ بھی اس تابوت کی طرف تھوکتے اور گندگی پھینکتے تھے۔ کسی نے پوچھا کہ "ماجرا کیا ہے؟"

    مزید ...
  • ماہ مبارک رمضان؛ 30 دن، تیس پیغامات - 5

    رسول اللہ (صلی اللہ علیہ و آلہ) کی سیرت میں منقول ہے کہ آپ اللہ کی شکرگزاری کے لئے اس قدر نماز اور نیم شب کی عبادت کرتے تھے، کہ آپ کہ چہرہ مبارک پیلا پڑ جاتا تھا اور آپ کے پاؤں پھول جاتے تھے۔

    مزید ...
  • ماہ مبارک رمضان؛ 30 دن، تیس پیغامات - 4

    مروی ہے کہ رسول اللہ (صلی اللہ علیہ و آلہ) ایک پاگل کے پاس سے گذرے تو فرمایا: "اس شخص کو کیا ہؤا ہے؟"، کہا گیا کہ "وہ مجنون (دیوانہ یا پاگل) ہے۔ آپ نے فرمایا: [نہیں!] بلکہ وہ مریض ہے، مجنون تو وہ ہے جو دنیا کو آخرت پر مقدم رکھے"

    مزید ...
  • ماہ مبارک رمضان؛ 30 دن، تیس پیغامات - 3

    ایمان کے چار ارکان (ستون) ہیں: 1۔ رضا به قضائے الہی (یعنی خدا کے فیصلوں پر راضی ہونا)؛ 2۔ خدا پر توکل (اور بھروسہ) کرنا؛ 3۔ اپنے امور (معاملات) خدا کے سپرد کردا اور 4۔ اللہ کے فرمان کے سامنے سر تسلیم خم کرنا"۔

    مزید ...
  • ماہ مبارک رمضان؛ 30 دن، تیس پیغامات - 2

    امام خمینی (رضوان اللہ تعالی علیہ) قرآن کے ساتھ دائمی طور پر مانوس تھے اور آپ کا بنیادی مطالعہ ہی تلاوت قرآن پر مشتمل تھا اور شب و روز کے دوران سات مرتبہ قرآن کی تلاوت کرتے تھے اور یہ سنت حسنہ آپ کی حیات طیبہ کے آخری دنوں تک جاری رہی۔

    مزید ...
  • امید مستضعفین کی حکومت

    اگر ہم واقعی ظہور مہدی عج کے منتظر ہیں تو ہمیں حقیقی منتظر بننا ہوگا، نہ صرف ہم نے خود کو حسد، تفرقہ بازی، فتنہ پروری سے دور کرنا ہوگا بلکہ ہر ظلم و ستم کا راستہ بھی روکنا ہوگا، ہمیں قتل و غارت گری کے راستے میں سیسہ پلائی ہوئی دیوار بننا ہوگا

    مزید ...
  • شہید غازیؑ

    قیامت کے دن رسول خدا صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم، امام علی علیہ السلام سے فرمائیں گے کہ فاطمہ سلام اللہ علیہاسے پوچھو کہ امت کی شفاعت و نجات کے لئے اس سخت وقت میں آپ کے پاس کیا ہے؟ تو جواب میں جناب فاطمہ زہرا سلام اللہ علیہا فرمائیں گی: "اے امیرالمومنینؑ! ہمارے پاس (امت کی) شفاعت کے لئے میرے بیٹے عباسؑ کے دو کٹے ہوئے ہاتھ کافی ہیں۔

    مزید ...
  • بعثتِ نبوی: بشریت کی نجات کے لئے نسخہ کامل

    عثتِ نبوی تاریخِ انسانی کاسب سےعظیم اور اعلی انسانی اقدارکے وجود میں آنے کادن ہے۔اس روز پیامبراکرم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے ایک ایسی تحریک کا آغازکیا، جس کا ہدف بشریت کومعنوی وروحانی اعتبارسےمنزلِ کمال تک پہنچانے کے ساتھ ساتھ اصلاحِ معاشرہ کرتے ہوئے اجتماعی زندگی کو بہتر بنانا تھا۔

    مزید ...
  • بلا نازل ہونے کے اسباب اور صبر و استقامت کی روشیں؛ امام ہادی (علیہ السلام) کی نظر ميں

    اہل بیت (علیہم السلام) دنیا کو دار البلاء اور آزمائشوں کا گھر اور آخرت تک پہنچے کے لئے پل سمجھتے ہیں۔ یہ دنیا انسان کا بنیادی مقصد نہیں ہے؛ بلکہ ایک راستہ ہے کہ اگر اس سے درست فائدہ لیا جائے تو ہمیں اصلی منزل مقصود تک پہنچا دیتا ہے۔

    مزید ...
  • دنیا امام علی النقی الہادی علیہ السلام کی نظر میں

    آیت اللہ جوادی آملی کی عالمانہ تشریح

    امام (علیہ السلام) نے فرمایا: دنیا ایک بازار ہے، جہاں کچھ لوگوں نے نفع اٹھایا، یہ وہی لوگ ہیں جو "یَرْجُونَ تِجارَةً لَنْ تَبُورَ؛ ایسی تجارت سے امید باندھے ہوئے ہیں جو کبھی زوال پذیر نہیں ہوتی"۔

    مزید ...
  • انقلاب اسلامی ایران تاریخ کے آئینہ میں

    امامؒ کا سب سے اہم اور جراتمندانہ قدم اپنے دور کی بڑی طاقت روس کو اسلام کا پیغام دینا تھا۔ یہ واقعہ بھی اُس واقعہ سے مماثلت رکھتا ہے کہ جب نبی کریم صلّی اللہ علیہ وآلہٖ وسلم نے روم اور ایران کے بادشاہوں کو دعوتِ اسلام دی تھی۔ امام ؒ نے روس کے صدر گوربا چوف کو آگاہ کیا تھا کہ اُن کے ملک کا حقیقی مسئلہ نجی ملکیت و اقتصادیات کا نہیں بلکہ اصل مسئلہ خدا پر ایمان نہ لانا تھا۔ اس حقیقت کا اعتراف خود روسی صدرنے امام ؒ کی رحلت کے بعد کیا تھا۔

    مزید ...
  • عزت و وقار کی عرضداشت

    سعودی عرب میں عادلانہ نظام کے قیام کے لیے شہید شیخ نمر باقر النمر کے ہاتھوں کی تحریر

    یہ عرضداشت سعودی عرب کے سیاسی سوجھ بوجھ رکھنے والے عوام کے مطالبات کا خلاصہ اور عوامی حکومت کے قیام کو عمل میں لانے کا ایک شرعی منشور تھا۔ ایسی حکومت جس میں عدل و انصاف، آزادی اور سربلندی قانونی اور عدالتی دائرے میں بغیر کسی امتیاز کے تحقق پائے۔

    مزید ...
  • مغرب میں اعلی سرکاری سطوح پر توہین رسالت/ کیا وحدت مسلمین کی ضرورت کے لئے "کافی دلیل" نہیں ہے؟

    کوئی کسی کو اپنا مذہب چھوڑنے کی دعوت نہیں دے رہا ہے بلکہ دعوت یہ ہے کہ اپنا عقیدہ محفوظ رکھیے اور دوسروں کو اپنے عقیدے پر عمل کرنے دیجئے اور جو مسائل مشترکہ ہیں، ان کے لئے اشتراک عمل کے ساتھ کام کرنا چاہئے۔

    مزید ...
  • ہفتہ وحدت باعث رحمت

    شیعہ ہوں یا سنی ہم سب بھائی بھائی ہیں اور حسین علیہ السلام کسی ایک فرقے کے امام یا پیشوا نہیں ہیں بلکہ تمام مسلمانوں کے آقا و جنت کے سردار ہیں۔ کیونکہ وہ اللہ کے نبی کے نواسے ہیں جن کا کلمہ پڑھے بغیر مسلمان نہیں ہو سکتے تو ان کی دشمنی کرنیوالا اور انھیں اذیت دینے والا کیسے مسلمان ہو سکتا ہے۔

    مزید ...
  • ہفتہ وحدت اور حرمت رسول(ص)

    ایام ولادت رسالت مآب(ص) ہیں، مبارک ایام ہیں، خوشیوں کے ایام ہیں، ہر طرف چراغاں ہی چراغاں ہے، ایسے میں نبی اکرم(ص) کی ذات گرامی کے خلاف مہم جاری ہے۔ بدزبان اور دوسروں کے جذبات کو سمجھنے سے عاری لوگ ہمارے قلوب کو زخمی کر رہے ہیں۔

    مزید ...
  • عزاداری کی نعمت اور عزاداروں کی ذمہ داریاں

    یہ وہ غم ہے جو ظاہر و باطن میں انسان کے وجود میں ایک ایسا انقلاب پربا کر دیتا ہے کہ انسان بغیر قدروں کے ساتھ جینے کو موت سے عبارت جانتا ہے اور شاید یہی وجہ ہے کہ آج ہر مکتب خیال کے افراد اس کے ساتھ جڑے نظر آتے ہیں ۔

    مزید ...
  • کربلا اور انتظار کے درمیان الہی سنتوں کا رابطہ

    تحریک کربلا اور عقیدہ مھدویت اس سماج کے دو ایسے حقیقی عناصر و رکن ہیں جنکے بغیر اس معاشرہ کو سمجھنا مشکل ہے جب اس معاشرہ کی ایک سمت کربلا ہے دوسرے سمت مھدویت ہے تو اب ضروری ہے کہ ہم اپنی ذمہ داری کو پہچانیں اور اس بات پر یقین رکھیں کہ کل ہمارا ہوگا۔

    مزید ...
  • عید مباہلہ اسلام کی عیسائیت پر فتح کا نام

    عیسائیوں کے سب سے بڑے پادری نے کہا، میں یہاں ان چہروں کو دیکھ رہا ہوں جو اگر پہاڑ کی طرف اشارہ کریں تو ان پر بھی لرزہ طاری ہو جائے گا اور اگر انہوں نے دعا کے لئے ہاتھ اٹھائے تو ہم اسی صحرا میں قہر الہی میں گرفتار ہو جائیں گے اور ہمارا نام صفحہ ہستی سے مٹ جائے گا۔

    مزید ...
  • غدیر کی اہمیت رہبر انقلاب کی نگاہ میں

    غدیر کا واقعہ صرف پیغمبر اکرم ص کا جانشین مقرر کرنے کیلئے رونما نہیں ہوا۔ غدیر کے دو پہلو ہیں: ایک جانشین مقرر کرنا اور دوسرا امامت کے مسئلے پر توجہ دلانا۔ امامت اسی معنی میں جو تمام مسلمان اس لفظ یا عنوان سے سمجھتے تھے۔

    مزید ...
  • حضرت علی (ع) اور جناب فاطمہ زہرا (س) کی شادی کا معیار

    اگر حضرت زہرا کے نزدیک شادی اور زندگی کا معیار مال و دولت ہوتا تو آپ یقینا عرب کے ان سرمایہ داروں اور مال داروں کے ساتھ شادی کرتیں جو آپ کے قدموں میں سونے اور جواہرات کے ڈھیرے لگانے کو تیار تھے اس لیے کہ فاطمہ زہرا کسی معمولی انسان کی بیٹی نہیں تھیں۔

    مزید ...