بلاد الحرمین میں انقلاب کی آمد آمد ہے / آل سعود کو عزم ملت کا سامنا

بلاد الحرمین میں انقلاب کی آمد آمد / عزم اقوام کا طوفان آل سعود کے دامنگیر ہورہا ہے۔

اہل البیت (ع) نیوز ایجنسی ـ ابنا ـ کی رپورٹ کے مطابق آل سعود مخالف جماعت حزب الامۃ الاسلامی نے آل سعود کو یمن میں امریکی منصوبوں کا ساتھ دینے کے حوالے سے خبردار کرتے ہوئے اعلان کیا ہے کہ سعودی عرب میں بھی انقلاب عنقریب شروع ہونے والا ہے۔ اطلاعات کے مطابق سعودی عرب کی ایک سیاسی جماعت حزب الامۃ الاسلامی نے آل سعود کو یمن میں امریکی منصوبوں کا ساتھ دینے پر خبردار کیا ہے اور کہا کہ کہ سعودی حکمران یمن کے پرامن عوامی انقلاب کے مدمقابل امریکیوں کے ساتھ ایک ہی مورچے میں آکھڑے ہوئے ہیں اور یوں انھوں نے بلاد الحرمین کے عوام کو ـ جو یمنی عوام پر روا رکھے جانے والے ظلم و جبر کر خلاف ہیں ـ چیلنج کیا ہے۔

ــ عزم اقوام کا طوفان آل سعود کے دامنگیر ہورہا ہے بحرین کی حرکۃالاحرار کے سیکریٹری جنرل نے کہا: آج علاقے کے عوام جان گئے ہیں کہ عوامی انقلابات کے خلاف ہونے والی تمام سازشوں کا سرچشمہ سعودی عرب ہے۔ اطلاعات کے مطابق بحرین کی حرکۃالاحرار کے سیکریٹری جنرل ڈاکٹر سعید الشہابی نے کہا: آج سعودی حکومت ملتوں اور انقلابات کے بیچ گھر چکی ہے اور دنیائے عرب اس حقیقت کا پورا ادراک رکھتی ہے چنانچہ ملتوں کے عزم کا طوفان بہت جلد آل سعود کا دامن پکڑنے والا ہے۔ سعید الشہابی نے کہا: علاقے کے عوام جان چکے ہیں کہ تمام انقلابات کے خلاف ہونے والی سازشوں کا اصل سرچشمہ آل سعود کی حکومت ہے اور امریکہ بھی مالی اور فوجی لحاظ سے آل سعود کی حمایت کررہا ہے۔

حزب الامۃ الاسلامی کے سینئر بورڈ کے ممبر شیخ محمد بن سعد آل مفرح نے کہا: یمنی عوام کے خلاف سعودی حکومت کے غیراخلاقی اور غیرذمہ دارانہ اقدامات اس بات کی گواہی دیتے ہیں کہ کہ بلادالحرمین کے عوام انقلاب یمن کی حمایت کرتے ہیں۔انھوں نے امریکیوں کے ساتھ آل سعود کے اشتراک عمل کو مسترد کرتے ہوئے کہا اور آل سعود کو جاننا چاہئے کہ امریکی انتظامیہ نے علاقے میں اپنے تمام کٹھ پتلیوں کا ساتھ چھوڑ دیا ہے اور اس حکومت کو بہت جلد ملک گیر سیاسی تبدیلیوں کا سامنا کرنا پڑے گا۔

انھوں نے کہا: سعودی عرب علاقے میں مغرب کا آخری مورچہ ہے اور اگر سعودی عرب نہ ہو تو اسرائیل کو علاقے کی ایسی اقوام کا براہ راست سامنا کرنا پڑے گا جو اپنی قسمتوں کا مقابلہ خود کرنا چاہتی ہیں۔ انھوں نے کہا: علاقے کی قومیں تمام مقبوضہ سرزمینوں کی آزادی کے خواہاں ہيں تا ہم آل سعود کی حکومت عربی اور اسلامی معاشروں کو دبا کر رکھنے کے حوالے سے علاقے میں مغربی اسٹراٹیجی میں اہم کردار ادا کر رہی ہے اور اپنے تمام وسائل اور اوزاروں کو بروئے کار لاکر عرب انقلابات کا چہرہ بگاڑنے کی کوشش کررہی ہے۔ انھوں نے کہا: آل سعود ہتھیاروں اور طاقت کے سہارے بحرین میں داخل ہوئے ہیں اور مصر و یمن  حتی کہ شام میں عوامی تحریکوں کو خانہ جنگیوں میں تبدیل کرچکے ہیں


دنیا بھر میں میلاد پیغمبر رحمت(ص) کی محفلوں کی خبریں
سینچری ڈیل، نہیں
حضـرت ابــوطالب (ع) حامی پیغمبر اعظـم (ص) بین الاقوامی کانفرنس میں
ہم سب زکزاکی ہیں / نائیجیریا کے‌مظلوم‌شیعوں کے‌ساتھ اظہار ہمدردی