• عزاداری کی نعمت اور عزاداروں کی ذمہ داریاں

    یہ وہ غم ہے جو ظاہر و باطن میں انسان کے وجود میں ایک ایسا انقلاب پربا کر دیتا ہے کہ انسان بغیر قدروں کے ساتھ جینے کو موت سے عبارت جانتا ہے اور شاید یہی وجہ ہے کہ آج ہر مکتب خیال کے افراد اس کے ساتھ جڑے نظر آتے ہیں ۔

    مزید ...
  • کربلا اور انتظار کے درمیان الہی سنتوں کا رابطہ

    تحریک کربلا اور عقیدہ مھدویت اس سماج کے دو ایسے حقیقی عناصر و رکن ہیں جنکے بغیر اس معاشرہ کو سمجھنا مشکل ہے جب اس معاشرہ کی ایک سمت کربلا ہے دوسرے سمت مھدویت ہے تو اب ضروری ہے کہ ہم اپنی ذمہ داری کو پہچانیں اور اس بات پر یقین رکھیں کہ کل ہمارا ہوگا۔

    مزید ...
  • عید مباہلہ اسلام کی عیسائیت پر فتح کا نام

    عیسائیوں کے سب سے بڑے پادری نے کہا، میں یہاں ان چہروں کو دیکھ رہا ہوں جو اگر پہاڑ کی طرف اشارہ کریں تو ان پر بھی لرزہ طاری ہو جائے گا اور اگر انہوں نے دعا کے لئے ہاتھ اٹھائے تو ہم اسی صحرا میں قہر الہی میں گرفتار ہو جائیں گے اور ہمارا نام صفحہ ہستی سے مٹ جائے گا۔

    مزید ...
  • غدیر کی اہمیت رہبر انقلاب کی نگاہ میں

    غدیر کا واقعہ صرف پیغمبر اکرم ص کا جانشین مقرر کرنے کیلئے رونما نہیں ہوا۔ غدیر کے دو پہلو ہیں: ایک جانشین مقرر کرنا اور دوسرا امامت کے مسئلے پر توجہ دلانا۔ امامت اسی معنی میں جو تمام مسلمان اس لفظ یا عنوان سے سمجھتے تھے۔

    مزید ...
  • انگریزی شیعہ کون ہیں؟ چوتھی قسط

    انگریزی تشیّع کی پوری توجہ اصولی طور پر برطانیہ کے اختلاف انگیز اقدامات اور پالیسیوں کے نفاذ پر مرتکز رہتی ہے اور عالمی استکبار و استعمار کے مد مقابل اسلامی اتحاد و یکجہتی سے اس کا کوئی واسطہ نہیں ہے

    مزید ...
  • آئیوری کوسٹ میں شیعوں کی صورتحال؛

    شیخ زکریا کوناتی: آئیوری کوسٹ میں ۲ فیصد شیعہ آبادی ہے/ شیعوں کو مساجد کی اشد ضرورت ہے

    آئیوری کوسٹ میں اسلام کے ورود کی تاریخ 18 ویں صدی عیسویں بتائی جاتی ہے، مسلم تاجروں نے اس ملک میں اسلام کو فروغ دیا ، آج سب سے زیادہ اس ملک میں سنی مسلمان خصوصا مالکی ہیں۔ لیکن کچھ انگشت شمار شیعہ مسلمان بھی موجود ہیں۔

    مزید ...
  • انگریزی شیعہ کون ہیں؟ تیسری قسط

    امام خامنہ ای نے ہمیشہ زور دے کر فرمایا ہے کہ اصلی اور فرعی دشمنوں کی شناخت کرکے انہيں ایک دوسرے سے الگ کرنا چاہئے؛ تاہم انگریزی تشیع فرعی دشمن نہیں ہے۔ یہ اصلی اور بنیادی دشمن ہیں۔

    مزید ...
  • حضرت علی (ع) اور جناب فاطمہ زہرا (س) کی شادی کا معیار

    اگر حضرت زہرا کے نزدیک شادی اور زندگی کا معیار مال و دولت ہوتا تو آپ یقینا عرب کے ان سرمایہ داروں اور مال داروں کے ساتھ شادی کرتیں جو آپ کے قدموں میں سونے اور جواہرات کے ڈھیرے لگانے کو تیار تھے اس لیے کہ فاطمہ زہرا کسی معمولی انسان کی بیٹی نہیں تھیں۔

    مزید ...
  • انگریزی شیعہ کون ہیں؟ دوسری قسط

    بابیت، بہائیت اور حتی [قادیانیت، دیوبندیت اور] وہابیت کے اندرونی نشیب و فراز سے قطع نظر، تفرقہ و اختلاف ڈال کر امت مسلمہ کو کمزور کرکے دشمنان دین و قرآن کی طرف سے انتشار و افتراق پھیلانے کا یہ عمل برطانیہ، یہودی ریاست (اسرائیل) اور امریکہ اور ان حواریوں کی مدد سے، آج بھی جاری ہے

    مزید ...
  • انگریزی شیعہ کون ہیں؟ پہلی قسط

    قدیم الایام سے فرقہ سازی اور ادیان و مذاہب کی شاخیں بنانا عالم اسلام میں برطانوی خفیہ اور خارجہ اداروں کے ایجنڈے میں شامل ہے؛ وہابیت، بہائیت، قادیانیت، پرویزیت اور درجنوں دوسرے فرقوں کا اختراع عالم اسلام کو اتحاد و یکجہتی سے دور کرنے کے لئے برطانوی خفیہ اداروں کی پالیسی کا انجام ہے

    مزید ...
  • بہائیوں کے بانیان کا تعارف

    عبد البہاء نے شوقی افندی کی نسل سے ۲۴ جانشین پیدا ہونے کی پیش گوئی کی تھی مگر شوقی بے اولاد ہونے کی وجہ سے اس سلسلے کو آگے نہیں بڑھا پائے اور عبد البہاء کی پیش گوئی غلط ثابت ہوئی اور ان کی نسل سے بہائیت کی باگ ڈور سنبھالنے والا کوئی جانشین پیدا نہیں ہوا۔

    مزید ...
  • فرقہ بہائیت کی مختصر تاریخ

    بہائیوں کا عقیدہ ہے کہ مرزا حسین علی نوری (بہاء اللہ) اللہ کے پیغمبر تھے۔ بہاء اللہ کا باپ ایران کے بادشاہ قاجار کے دور میں درباری مشیر تھا اور حکومت میں کافی اثر و رسوخ رکھتا تھا۔

    مزید ...
  • امریکی صہیونی تنظیم ZOA کا تعارف

    امریکی صہیونی تنظیم صرف صہیونی ریاست کے تحفظ کے لیے کام کرتی اور اس راہ میں پائے جانے والی ہر رکاوٹ کو دور کرنے کی کوشش کرتی ہے اس تنظیم کی ایک اہم سرگرمی اسرائیل پر حاکم نظام کی حمایت کے لیے دوسرے ممالک کے حکمرانوں میں نفوذ پیدا کرنا ہے تاکہ دیگر ممالک کے حکمرانوں کو اسرائیلی پالیسیوں قانع کریں اور انہیں اسرائیل کو تسلیم کرنے پر مجبور کریں۔

    مزید ...
  • محتاج و مساکین کی امداد

    جذبہ ٔ ہمدردی کے ساتھ ہوشیاری بھی لازمی

    موجودہ دور میں جبکہ کہ مسحق افراد کی امداد رسانی کے لئے شوشل میڈیا، دیجٹل اور پرنٹ میڈیا وغیر ہ کا سہارا لیا جا رہا ہے ۔ایسے میں غربا اور مساکین کی مدد کرنے والوں کو قدم پھونک پھونک کر اٹھانے کی ضرورت ہے۔کیونکہ بہت سے پیشہ ور گدا گر بھی اس چیز سے فائدہ اٹھا سکتے ہیں ۔ان ذرایع سے بھیک مانگنا نہات ہی آسان ہے ۔بس ایک پوسٹ تیار کردی جس کے پس میں منظر میں بے بسی اور لاچاری جھلک رہی ہو۔

    مزید ...
  • حزب اللہ کے خلاف جرمنی کے غلط فیصلے کے مختلف پہلو اور خطرناک نتائج

    امریکہ اور اس کے حواری یورپی ممالک کی طرف سے حزب اللہ کے خلاف ہونے والے اقدامات نئے نہیں ہیں لیکن جرمن حکومت کی طرف سے حزب اللہ کی سرگرمیوں پر پابندی اور اس مزاحمتی جماعت کا نام مبینہ دہشت گرد جماعتوں کی اپنی سی فہرست میں قرار دینا مختلف اور نئے قابل غور پہلؤوں کا حامل اقدام ہے۔

    مزید ...
  • یہودی ریاست کے آگے سجدہ ریز جرمن حکمران نجاست کو خباثت سے دھونے کے لئے کوشاں

    جرمنی نے گناہ کبیرہ کا ارتکاب کرکے اپنا گناہ دھونے کی ناکام کوشش کرتے ہوئے یہودی تسلط کے خلاف مزاحمت کرنے کی پاداش میں حزب اللہ لبنان کا نام بز‏عم خود دہشت گرد جماعتوں کی فہرست میں درج کردیا ہے۔

    مزید ...
  • امریکہ-سعودی کشمکش! تیل کی جنگ؛ محمد بن سلمان سعودی معیشت کی تباہی کا ذمہ دار

    سعودی ولیعہد کی طرف سے روس کے ساتھ تیل کی قیمتوں پر روس کے ساتھ تقابل کے نتیجے میں خلیج فارس کی ساحلی عرب ریاستوں کی یک پیداواری معیشت کو شدید خطرہ لاحق ہے؛ دیکھئے ایرانی معیشت کا تُرَپ کا پتہ کیا ہے؟

    مزید ...
  • جنرل شہید سلیمانی ادارہ تعمیرنو مزارات اہل بیت علیہم السلام کے بانی

    جب بھی اسلام کے عظیم جرنیل قاسم سلیمانی کا نام آتا ہے، زیادہ تر افراد کو عراق، شام اور لبنان میں ان کی بہادریاں یاد آتی ہیں لیکن بہت کم لوگ ایسے ہونگے جو شہید سلیمانی کو عتبات عالیہ کی تعمیر نو کے ادارے کے بانی کے عنوان سے جانتے اور پہچانتے ہوں۔

    مزید ...
  • ظہور قریب ہے اور بعید نہیں ہے!

    اس میں کوئی بھی شک نہیں کرسکتا کہ ہر روز جو گذرتا ہے ایک قدم ہے ایام ظہور کی طرف اور قرآن و دینی تعلیمات کے مطابق بھی حضرت حجت علیہ السلام کا ظہور بعید نہیں ہے بلکہ قریب ہے اور اگر کچھ بزرگان دین ہمیں آپ کے ظہور کی نوید دیتے ہیں تو ان پر ملامت کرنے کے بجائے ہمیں ان کے اقوال میں بھی اور دینی تعلیمات میں بھی غور و تدبر سے کام لینا چاہئے اور اپنی فکر کی اصلاح کا اہتمام کرنا چاہئے۔

    مزید ...
  • امریکی تھنک ٹینک: کورونا نے انسان کی بےبسی اور خدا کی ضرورت کو آشکار کردیا!

    امریکی تھنک ٹینک "ڈیلی سگنل" نے کورونا وائرس کے آگے انسان کی بےبسی کی طرف اشارہ کرتے ہوئے ـ مغربی انسان کے سینکڑوں برسوں سے خدا اور معنویت سے انکار کے باوجود اعتراف کیا ہے کہ "خدا کے ارادے کے آگے ہماری بےبسی اس وقت سب پر عیاں ہوچکی ہے اور اس میں شک نہیں ہے کہ انسان اللہ کا محتاج ہے"۔

    مزید ...
  • امریکن ڈریم کا انجام؛

    یہاں مزید سپنوں کی سرزمین نہيں رہی

    کورونا بحران کو مہینے گذرے مگر امریکی انتظامیہ مداوا کے وسائل فراہم کرنے سے عاجز ہے اور طبی وسائل کی قلت ایک سنجیدہ بحران میں بدل چکی ہے۔ کورونا میں مبتلا لاکھوں امریکیوں کا ٹیسٹ نہیں ہوا / یہاں مزید سپنوں کی سرزمین نہیں ہے۔

    مزید ...
  • عراق سے امریکیوں کے پرامن انخلاء کا آپشن ہمیشہ دستیاب نہیں ہوگا

    رائٹرز نے امریکی وزارت خارجہ کے ایک اعلی عہدیدار کے حوالے سے کہا ہے کہ: امریکہ شدت سے مایوس ہوچکا ہے کیونکہ عراقی حکومت امریکی اتحاد کی افواج کی حفاظت کے سلسلے میں اپنی ذمہ داریاں نہیں نبھا رہا ہے!

    مزید ...
  • پاکستان، کورونا اور شیعہ زائرین قرنطینہ یا پھر قرون وسطی کا عقوبت خانہ

    حکومت پاکستان نے کورونا وائرس کو عرصے سے چھپا رکھا تھا اور چونکہ پاکستان چین کا پڑوسی ملک ہے اور ان دو ملکوں کے درمیان سرحدوں پر لوگوں کی آمد و رفت مسلسل جاری رہتی ہے لہذا ایران سے بہت پہلے کورونا وائرس پاکستان میں منتقل ہوچکا تھا؛ گوکہ اس نے ووہان میں تعلیم حاصل کرنے والے طلبہ کو کورونا کے سپرد کرکے یہ ثابت کرنے کی کوشش کی کہ "ہمارے لئے اپنے عوام کے بچوں تک کی کوئی اہمیت نہیں ہے، ہم تو بس کورونا کو ملک میں نہیں آنے دیں گے" لیکن دنیا کے 180 سے زائد ممالک جو اس وقت کورونا میں مبتلا ہیں، بھی کورونا کو اپنی سرزمینوں میں نہیں آنا دینا چاہتے تھے اور ان میں سے اکثر ممالک چین سے ہزاروں میل دور بھی تھے، لیکن آج ہم دنیا بھر کے اکثر ممالک میں کورونا کی جولانیوں کے عینی شاہد ہیں؛ بہرحال امریکہ، سعودیہ اور ترکی کی طرح پاکستان نے بھی بہتیری کوشش کی اپنے ملک میں کورونا میں مبتلا افراد کو دنیا کی آنکھوں سے دور رکھا جائے ورنہ تو 22 کروڑ کا ملک جو چین کا پڑوسی ہے، اس وائرس سے کہاں بچ کر رہ سکتا ہے؟

    مزید ...
  • ایک مغالطہ اور اس کا جواب:

    کورونا کے آگے علم طب کی بےبسی / کورونا نے سائنس کو عاجز کردیا، نہ کہ سائنس نے دین کو

    کورونا وائرس نے دنیا بھر کو متاثر کیا تو دین دشمن افراد اور لابیوں نے اس موقع سے فائدہ اٹھانے کی ٹھانی ہے اور کچھ لوگ مغالطوں سے بھرپور اعتراضات اور شبہات پیش کرکے کورونا کو نوجوانوں کے دل میں دین و اعتقاد کو کمزور کرنے کا ذریعہ بنانے کی ناکام کوشش کررہے ہیں۔ یہاں بھی مغالطوں سے بھرے کچھ جملے سامنے آئے ہیں جیسے "دین نے سائنس کے سامنے گھٹنے نہیں ٹیکے ہیں، وغیرہ جبکہ حقیقت یہ ہے کہ دین کی نہیں بلکہ سائنس کی کمزوری ابھر کر سامنے آئی ہے اور سائنس نے ایک وائرس کے سامنے گھٹنے ٹیک دیئے ہیں! سائنس واقعی بےچارگی کا شکار ہے اور ہمیشہ انسانی ضروریات کے سامنے بےچارگی سے دوچار رہی ہے۔ گوکہ محنت کش سائنسدان جو انسانی مسائل حل کرنے کے لئے شب و روز مصروف عمل رہتے ہیں، قابل صد احترام ہیں۔

    مزید ...
دنیا میں عزائےحسینی کی خبریں
عاشورا خلقت کا راز
ویژه‌نامه ارتحال آیت‌الله تسخیری
پیام رهبر انقلاب به مسلمانان جهان به مناسبت حج 1441 / 2020
اہل بیت(ع) انٹرنیشنل یونیورسٹی میں داخلے کا اعلان (2021-2022)

All Content by AhlulBayt (a.s.) News Agency - ABNA is licensed under a Creative Commons Attribution 4.0 International License