ڈی آئی خان میں ٹارگٹ کلنگ کا سلسلہ جاری؛

ڈیرہ اسماعیل خان میں آزادی سے دندناتے ہوئے ٹارگٹ کلرز نے مزید تین گھرانے اجاڑ دیئے

ڈیرہ اسماعیل خان میں آزادی سے دندناتے ہوئے ٹارگٹ کلرز نے مزید تین گھرانے اجاڑ دیئے

ٹارگٹ کلنگ کا پہلا سانحہ چودھوان موڑ عربی مسجد کے قریب پیش آیا ہے، جس میں دہشتگردوں نے باقر حسین بلوچ نامی شخص پہ فائرنگ کی۔ متعدد گولیاں لگنے سے باقر حسین ولد ہاشم حسین سکنہ ببر پکہ موقع پہ ہی شہید ہوگیا۔ قاتل ارتکاب جرم کے بعد فرار ہوگئے۔ شہید باقر حسین کے پہلے بھی 2 بھائی دہشتگردی میں شہید ہوچکے ہیں۔

اہل بیت (ع) نیوز ایجنسی ۔ ابنا ۔ کی رپورٹ کے مطابق ڈیرہ اسماعیل خان میں آزادی سے دندناتے ہوئے ٹارگٹ کلرز نے مزید تین گھرانے اجاڑ دیئے ہیں۔ ڈیرہ کی تحصیل پروا میں چند منٹ میں دہشت گردی کے 3 واقعات میں تین افراد لقمہ اجل بن گئے ہیں، جس کے بعد علاقے کی فضا شدید غمناک ہوچکی ہے۔ ٹارگٹ کلنگ کا پہلا سانحہ چودھوان موڑ عربی مسجد کے قریب پیش آیا ہے، جس میں دہشتگردوں نے باقر حسین بلوچ نامی شخص پہ فائرنگ کی۔ متعدد گولیاں لگنے سے باقر حسین ولد ہاشم حسین سکنہ ببر پکہ موقع پہ ہی شہید ہوگیا۔ قاتل ارتکاب جرم کے بعد فرار ہوگئے۔ شہید باقر حسین کے پہلے بھی 2 بھائی دہشت گردی میں شہید ہوچکے ہیں۔

ٹارگٹ کلنگ کی دوسری کارروائی پروا تھانہ کی حدود ماہڑہ اڈا کے قریب ہوئی، جس میں نامعلوم افراد نے کالو خان ولد حیدر خان پر فائرنگ کی۔ جس سے وہ موقع پہ ہی دم توڑ گیا۔ ٹارگٹ کلنگ کی تیسری کارروائی بھی پروا ہی کی حدود میں ہوئی، جس میں حفاظت اللہ سکنہ پکہ ببر جاں بحق ہوگیا۔

یکے بعد دیگرے تیسرے بھائی کی شہادت کے خلاف شہید باقر حسین کے لواحقین نے قریشی موڑ کے قریب لاش سڑک پہ رکھ کر دھرنا دے دیا ہے اور انڈس ہائی وے کو ہر قسم کی ٹریفک کیلئے بند کر دیا ہے۔ جس سے دونوں جانب ٹریفک کی لمبی قطاریں لگ گئی ہیں۔ ڈی پی او ڈیرہ موقع پہ پہنچ گئے ہیں، جہاں لواحقین اور ڈی پی او کے درمیان مذاکرات جاری ہیں۔ شہید باقر حسین کے بھائی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا ہے کہ علاقے میں شیعہ نسل کشی جاری ہے، میرے تین بھائی دہشتگردی میں شہید ہوچکے ہیں جبکہ کوئی پرسان حال نہیں۔ عدم تحفظ کے باعث اہل تشیع نقل مکانی پہ مجبور ہیں۔ احتجاج میں اہل تشیع کمیونٹی کی تعداد مسلسل بڑھ رہی ہے، تاہم کوئی مذہبی لیڈر جائے واقعہ پہ نہیں پہنچ پایا ہے۔

.......

/169


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*

Arba'een
Mourining of Imam Hossein
haj 2018
We are All Zakzaky
telegram