مسئلہ کشمیر کا مطلوبہ حل اقوام متحدہ کی جموں و کشمیر سے متعلق قرار دادوں میں مضمر ہے: اصغریہ تحریک

مسئلہ کشمیر کا مطلوبہ حل اقوام متحدہ کی جموں و کشمیر سے متعلق قرار دادوں میں مضمر ہے: اصغریہ تحریک

بھارتی افواج کشمیر میں انسایت کے خلاف جرائم کا ارتکاب کررہے ہیں اور اس حوالے سے بھارت کے خلاف عالمی فوجداری عدالت میں باضابطہ مقدمہ چلایا جانا چاہئے۔

اصغریہ علم و عمل تحریک پاکستان کے مرکزی صدر سید پسند علی رضوی نے یوم کشمیر کے موقع پہ جاری پیغام میں کہا ہے کہ کشمیری عوام کی بھارت کے جموں و کشمیر پر قبضے کے خلاف مزاحمت ایک جائز، اخلاقی اور قانونی جدوجہد ہے اور اس جدوجہد میں ان کی مثالی قربانیوں کو سلام پیش کرتا ہوں، بھارتی فوجیوں کے ہاتھوں کشمیر میں گزشتہ چھ دہائیوں سے ظلم و ستم اور قتل غارت  کا ایک خوفناک سلسلہ جاری ہے۔ بھارتی فوجی عمداً و قصداً کشمیری نوجوانوں اور بچوں کو نشانہ بناکر پیلٹ گن کے ذریعے ان کی بینائی چھین رہے ہیں اور انہیں جسمانی طور پر ناکارہ بنارہے ہیں۔انہوں نے مزید کہا کہ کشمیر کے حالات کے حوالے سے عالمی ضمیر مردہ ہوچکا ہے، اقوام متحدہ اور دیگر عالمی ادارے خاموش تماشائی بن چکے ہیں اور ان کا سکوت بھارت کے حق میں جانبداری کے مترادف ہے۔ بھارتی افواج کشمیر میں انسایت کے خلاف جرائم کا ارتکاب کررہے ہیں اور اس حوالے سے بھارت کے خلاف عالمی فوجداری عدالت میں باضابطہ مقدمہ چلایا جانا چاہئے۔ مسئلہ کشمیر کا مطلوبہ حل اقوام متحدہ کی جموں و کشمیر سے متعلق قرار دادوں میں مضمر ہے ، لہذا ان قراردادوں پر علمدرآمد کرتے ہوئے جموں و کشمیر میں رائے شماری کا انعقاد کیا جانا چاہئے تاکہ کشمیری عوام آزادنہ ماحول میں اپنے مستقبل کا فیصلہ کرسکیں۔ اصغریہ علم و عمل تحریک پاکستان کے مرکزی صدر پسند رضوی نے مطالبہ کیا ہے کہ حکومت پاکستان سرکاری سطح پر اس سمت میں موثر اقدامات کرے کہ پاکستان کا میڈیا ، سول سوسائٹی اور مجموعی طورپر پاکستانی عوام جموں و کشمیر کے عوام کے ساتھ یکجہتی کا بھر پور مظاہرہ کریں، پاکستانی حکومت بین الاقوامی سطح پر مسئلہ کشمیر کے منصفانہ حل کو اولین ترجیح بنائے اور اس معاملے میں عالمی حمایت کے حصول کیلئے ٹھوس کارروائی کرے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

۲۴۲


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*

Quds cartoon 2018
We are All Zakzaky
telegram