علامہ مقصود ڈومکی: امریکا اپنے استکباری منصوبوں کے باعث اقوام عالم میں نفرت کی علامت بن چکا ہے

علامہ مقصود ڈومکی: امریکا اپنے استکباری منصوبوں کے باعث اقوام عالم میں نفرت کی علامت بن چکا ہے

جیکب آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے ایم ڈبلیو ایم سندھ کے سیکریٹری جنرل نے کہا کہ امریکہ کی جانب سے غاصب اسرائیل کی حمایت اور سرزمین انبیاء فلسطین کے خلاف سازشیں اور اسی مہینے امریکی سفارتخانے کی بیت المقدس (یروشلم) منتقلی کے اعلان نے شیطان بزرگ امریکہ کے اسلام دشمن کردار کو بھی بے نقاب کردیا ہے۔

اہل بیت (ع) نیوز ایجنسی ۔ ابنا ۔ کی رپورٹ کے مطابق مجلس وحدت مسلمین صوبہ سندھ کے سیکریٹری جنرل علامہ مقصود ڈومکی نے جیکب آباد پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ عالمی دہشت گرد امریکہ کے اسلامی ممالک پر حملوں اور بیت المقدس سفارتخانے کی منتقلی کے خلاف 13 مئی کو ایم ڈبلیو ایم کے زیر اہتمام ملک گیر یوم احتجاج منائے گی، آج عالم اسلام اور وطن عزیز پاکستان کو جن مشکلات کا سامنا ہے اس کا ایک اہم سبب عالمی سامراجی قوتوں خصوصا امریکہ کا انسان دشمن کردار ہے، امریکہ اپنے انسان دشمن عزائم اور استکباری منصوبوں کے باعث اقوام عالم میں نفرت کی علامت بن چکا ہے، امریکہ کی جانب سے غاصب اسرائیل کی حمایت اور سرزمین انبیاء فلسطین کے خلاف سازشیں اور اسی مہینے امریکی سفارتخانے کی بیت المقدس (یروشلم) منتقلی کے اعلان نے شیطان بزرگ امریکہ کے اسلام دشمن کردار کو بھی بے نقاب کردیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ دنیا بھر میں دہشت گرد تنظیموں کی تشکیل اور بم دھماکے اور خودکش حملوں کے پیچھے امریکہ اسرائیل اور ان کے ایجنٹ ملوث رہے ہیں، بدنام زمانہ دہشت گرد تنظیم داعش کی تشکیل امریکہ نے کی اب شام میں شکست کے بعد ان دہشت گردوں کو امریکہ مکمل حفاظت سے افغانستان منتقل کر رہا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ افغانستان، عراق اور شام سمیت اسلامی ممالک پر حملے اور عوام کا قتل عام امریکہ کے ناقابل معافی جرائم ہیں، امریکہ کی جانب سے وطن عزیز پاکستان کو آئے روز دھمکیاں دی جاری رہی ہیں، جو قابل مذمت ہیں۔ اس سلسلے میں مجلس وحدت مسلمین 13 مئی بروز اتوار ملک گیر (یوم مردہ باد امریکا) منا رہی ہے، سندھ کے تمام اضلاع اور چھوٹے بڑے شہروں میں احتجاجی مظاہرے اور ریلیاں منعقد ہوں گی، جس میں مختلف مکاتب فکر کی سیاسی مذہبی جماعتوں کو شرکت کی دعوت دی جارہی ہے۔

علامہ مقصود ڈومکی نے کہا کہ گذشتہ کئی دہائیوں سے وطن عزیز پاکستان میں انہی سامراج کے پالے ہوئے دہشت گردوں کے ہاتھوں تسلسل کے ساتھ ملت جعفریہ کے علماء، اکابرین، شخصیات، ڈاکٹرز، انجینئرز اور معزز شہریوں کو تسلسل کے ساتھ دہشت گردی کا نشانہ بنایا گیا، یہ قتل عام اس تسلسل اور شدت کے ساتھ جاری ہے کہ اسے شیعہ نسل کشی ہی کا نام دیا جاسکتا ہے، کیونکہ ہمیں بسوں سے اتار کر شناختی کارڈ چیک کرکے گولیوں کا نشانہ بنایا گیا، ملک دشمن اور اسلام دشمن سامراجی قوتوں کے یہ آلہ کار اس ملک و قوم کے دشمن ہیں یہی سبب ہے کہ انہوں نے پاک فوج کو نشانہ بنایا وطن عزیز کی گلیاں پولیس کے جوانوں سے لے کر ہر طبقہ فکر کے معصوم انسانوں کے خون ناحق سے رنگین ہیں، مگر اس صورتحال میں جس مسلک اور مکتب کو سب سے زیادہ ظلم کا نشانہ بنایاگیا وہ شیعان علی ؑ ہی ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ اس صورتحال کا افسوس ناک پہلو یہ ہے کہ دہشت گردی کے مراکز، سہولت کاروں اور کالعدم دہشت گرد تنظیموں کو ملک بھر میں کھلی چھوٹ دی گئی ہے جو نفرت انگیز سرگرمیوں کو جاری رکھے ہوئے ہیں اور آج بھی کافر کافر کے فتنہ انگیز نعرے بلند کرتے ہیں، جب کہ تسلسل کے ساتھ ہونے والے ان سانحات میں ملوث مجرم ہر دفعہ باعزت بری ہوجاتے ہیں۔

۔۔۔۔۔۔۔

/169


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*

پیام امام خامنه ای به مسلمانان جهان به مناسبت حج 2016
We are All Zakzaky
telegram