بلوچستان کی نومنتخب حکومت کو علامہ راجہ ناصر عباس جعفری کی مبارکباد

بلوچستان کی نومنتخب حکومت کو علامہ راجہ ناصر عباس جعفری کی مبارکباد

علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے بلوچستان کے نومنتخب وزیر اعلی عبد القدوس بزنجو اور ایم ڈبلیو ایم کے رکن صوبائی اسمبلی آغا سید محمد رضا سمیت کابینہ کے دیگر وزرا ء کو حلف اٹھانے پر مبارکباد دی۔

اہل بیت(ع) نیوز ایجنسی۔ابنا۔ اسلام آباد( )مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے بلوچستان کے نومنتخب وزیر اعلی عبد القدوس بزنجو اور ایم ڈبلیو ایم کے رکن صوبائی اسمبلی آغا سید محمد رضا سمیت کابینہ کے دیگر وزرا ء کو حلف اٹھانے پر مبارکباد دیتے ہوئے امید ظاہر کی ہے کہ بلوچستان میں دہشت گردی کے خاتمے سمیت تمام مسائل کے ازالے کے لیے نئی حکومت اپنی تمام تر توانائیاں استعمال کرے گی۔انہوں نے کہ ماضی میں مسلم لیگ نون کی حکومت نے مفادات اور انتقام کی سیاست کو وتیرہ بنائے رکھا ۔عوامی مسائل اور مشکلات کا یکسر نظر انداز کیا جاتا رہا۔سرکاری وسائل کا بے دریغ استعمال کر کے قومی خزانے کو نقصان پہنچایا گیا۔بلوچستان کے قدرتی وسائل کو دانستہ طور پر نظر انداز کیا جاتا رہا۔ ملک دشمن طاقتوں کی ایما پر احساس محرومی کا تاثر دے کر لوگوں میں ریاست کے خلاف مایوسی پیدا کرنے کی کوشش کی جاتی رہی جس کے منفی اثرات سامنے آئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ بلوچستان ملک کا اہم ترین صوبہ ہے۔گوادر کے ساحلی علاقے پر موجود بندرگاہ کی اہمیت و افادیت نے ملک دشمن عناصر کے پیٹ میں مروڑ ڈال رکھے ہیں۔حکومت اس صوبے کے وسائل کے بہترین اندازمیں بروئے کار لائے تو یہاں کے عوام کی تقدیر بدل سکتی ہے۔انہوں نے کہا کہ دہشت گردوں نے اس علاقے کو اپنا نشانہ ہدف بنا رکھا ہے جس کا بنیادی مقصد صوبے کے امن امان کو تباہ کر کے سی پیک جیسے عظیم الشان منصوبے کی راہ میں رکاوٹ پیدا کرنا ہے۔نومنتخب حکومت کو جو چیلنجز درپیش ہیں ان میں سب سے زیادہ اہم دہشت گردوں کا خاتمہ اور ان کے سہولت کاروں کے گرد گھیرا تنگ کرنا ہے۔ جب تک دہشت گردی پر قابو نہیں پایا جاتا تب تک ترقی و استحکام کی منزل تک پہنچنا ممکن نہیں۔انہوں نے کہا کہ پوری قوم اس ملک کو امن و آشتی اوراتحاد واخوت کا گہوارہ دیکھنا چاہتی ہے۔یہ تب ہی ممکن ہے جب انتقامی سیاست کی بجائے اور مثبت اور تعمیری سیاست کے رجحانات کو فروغ دیا جائے۔انہوں نے کہا آغا سید رضا نے عوامی نمائندے کے طور پر بھی لاتعداد ترقیاتی منصوبے کا اجرا کیا۔عوام میں ان کی بے پناہ مقبولیت کا باعث ان کی مثبت تعمیراتی سوچ ہے۔ وزارت کا قلمدان ملنے کے بعد وہ پہلے سے زیادہ دلجمی اور محنت کے ساتھ عوامی خدمت جاری رکھیں گے۔بلوچستان کی نومنتخب حکومت میں مجلس وحدت مسلمین کے نمائندے کو وزیر بنا کر جس اعتماد کا اظہار کیا گیا ہے وہ باعث اطمینان ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

۲۴۲


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*

Mourining of Imam Hossein
haj 2018
We are All Zakzaky
telegram