اقوام متحدہ اجلاس میں بیت المقدس سے متعلق امریکی فیصلے کی مخالفت امید افزا

عالمی برادری نے پُرامن مشرقی وسطیٰ کے حق میں ووٹ دیا: آغا حسن

اقوام متحدہ اجلاس میں بیت المقدس سے متعلق امریکی فیصلے کی مخالفت امید افزا

رکزی امام باڑہ بڈگام میں نماز جمعہ کے بھاری اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے آغا حسن نے کہا ہے کہ بیت المقدس فلسطینی مملکت کا جُزلانفک تھا اور رہے گا۔

اہل بیت(ع) نیوز ایجنسی۔ابنا۔ سرینگر/ انجمن شرعی شیعیان جموں و کشمیر کے سربراہ اور سینئر حریت رہنما حجۃ الاسلام والمسلمین آغا سید حسن الموسوی الصفوی نے بیت مقدس سے متعلق امریکی صدر ٹرمپ کے حالیہ فیصلے کے بعد پیدا شدہ صورتحال پر اقوام متحدہ کے اجلاس میں ہوئی بحث و تمحیص اور ووٹنگ کو صحیح سمت کے جانب ایک امید افزا قدم قرار دیتے ہوئے کہا کہ اس اجلاس سے ایک بار پھر ثابت ہوا کہ عالمی برادری پُرامن مشرقی وسطیٰ کیلئے سنجیدہ ہے۔ یہ صرف امریکہ اور اسرائیل کے جارحانہ عزائم ہیں جو اس خطے میں قیام امن کی تمام کوششوں کو رائیگان کر رہے ہیں۔ مرکزی امام باڑہ بڈگام میں نماز جمعہ کے بھاری اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے آغا حسن نے کہا ہے کہ بیت المقدس فلسطینی مملکت کا جُزلانفک تھا اور رہے گا۔ انہوں نے کہا کہ اقوام متحدہ کے اجلاس میں امریکی فیصلے کے خلاف 128 ممالک اور امریکہ کے حق میں محض 9 ووٹ اس حقیقت کا غماز ہے کہ عالمی برادری کو صدر ٹرمپ کے فیصلے سے اس قدر تشویش لاحق ہے ۔ٓغا صاحب نے کہا کہ اجلاس میں پاس چدہ قرارداد میں امریکہ یا صدر ٹرمپ کا نام لینے سے گریز اس حقیقت کا منہ بولتا ثبوت ہے کہ عالمی ادارے پر امریکہ اور اسرائیل کا کس قدر اثرو رسوخ اور رعب و وحشت طاری ہے۔ اس موقعہ پر آغا صاحب نے وادی کے طول و عرض میں سرکاری فورسز کی ظلم و زیادتیوں اور شہری ہلاکتوں کے جاری سلسلے کی پُر زور الفاظ میں مذمت کی۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

۲۴۲


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*

پیام امام خامنه ای به مسلمانان جهان به مناسبت حج 2016
We are All Zakzaky
telegram