فلسطین کی آزادی مذاکرات سے نہیں مسلحانہ جدوجہد سے ہی ممکن ہے: حزب اللہ

 فلسطین کی آزادی مذاکرات سے نہیں مسلحانہ جدوجہد سے ہی ممکن ہے: حزب اللہ

حزب اللہ لبنان کے نائب جنرل سیکرٹری شیخ نعیم قاسم کا کہنا ہے کہ فلسطین کی آزادی مذاکرات سے نہیں بلکہ مسلحانہ جدوجہد سے ہی ممکن ہے۔

اہل بیت(ع) نیوز ایجنسی۔ابنا۔ لبنانی ذرائع ابلاغ کے حوالے سے بتایا ہے کہ لبنانی حزب اللہ کے نائب جنرل سیکرٹری شیخ نعیم کا کہنا ہے کہ فلسطین کی آزادی مذاکرات سے نہیں بلکہ مسلحانہ جدوجہد سے ہی ممکن ہے۔

انہوں نے تاکید کرتے ہوئے کہا کہ ہم مسلحانہ جدوجہد کو کسی بھی چیز سے تبدیل نہیں کریں گے، فلسطین کی آزادی کے لئے مسلحانہ مزاحمت جاری رہے گی۔

شیخ نعیم کا کہنا تھا کہ فلسطین انسانی حقوق کا پیمانہ ہے، اگر آپ کو حق کی تلاش ہے تو فوری طور پر فلسطین جائیں۔

انہوں نے کہا کہ بین الاقوامی قوانین اور آئین بڑے بڑے اور طاقتور ممالک کے لئے بنائے گئے ہیں، دنیا کی مظلوم ملتوں کو چاہئے اس بت کے خاتمے کے لئے کوششیں تیز کریں۔

شیخ نعیم نے مزید کہا کہ فلسطین کا اصل مزاحمتی محور خود فلسطینی عوام ہی ہیں، ہم فلسطینی عوام کی نیابت میں مزاحتمی تحریک نہیں چلارہے رہیں بلکہ ہم صرف فلسطینیوں کی مدد کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ان شاء اللہ عنقریب فلسطین آزاد ہوجائے گا۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

۲۴۲


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*

پیام امام خامنه ای به مسلمانان جهان به مناسبت حج 2016
We are All Zakzaky
telegram