اسرائیلی پارلیمنٹ میں ایک اور نسل پرستانہ قانون منظور

  • News Code : 818511
  • Source : urduirib
Brief

اسرائیلی پارلیمنٹ نے ایک اور نسل پرستانہ قانون کی منظوری دے دی ہے جس کے تحت اسرائیل کو یہودی حکومت کے طور پر تسلیم نہ کرنے والا کوئی بھی شخص پارلیمانی انتخابات میں حصہ نہیں لے سکتا۔

اہل بیت(ع) نیوز ایجنسی ۔ ابنا ۔ کی رپورٹ کے مطابق اسرائیلی پارلیمنٹ نے ایک اور نسل پرستانہ قانون کی منظوری دے دی ہے جس کے تحت اسرائیل کو یہودی حکومت کے طور پر تسلیم نہ کرنے والا کوئی بھی شخص پارلیمانی انتخابات میں حصہ نہیں لے سکتا۔

فلسطین انفارمیشن سینٹر کی رپورٹ کے مطابق، اس نسل پرستانہ قانون کا اطلاق لوگوں کی نجی زندگی پر بھی ہوگا حتی ان کے بیانات کا بھی اس قانون کے دائرے میں جائزہ لیا جائے گا۔
کہا جارہا ہے کہ اس قانون کے تحت دراصل انیس سو اڑتالیس کے مقبوضہ علاقوں کے رہنے والے عرب شہریوں کو براہ راست نشانہ بنایا گیا ہے جو صیہونیت مخالف کاروائیاں انجام دینے والے فلسطینیوں کی حمایت اور ان کے اہل خانہ سے ہمدردی کا اظہار کرتے ہیں۔
اسرائیلی پارلیمنٹ اس قانون کے ذریعے انیس سو اڑتالیس کے مقبوضہ علاقوں میں باقی ماندہ فلسطینیوں کو بھی کوچ پر مجبور کرنا چاہتی ہے۔

.......

/169


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*

Arba'een
Mourining of Imam Hossein
پیام امام خامنه ای به مسلمانان جهان به مناسبت حج 2016
We are All Zakzaky
telegram