دفاع مقدس کی فلمیں تسلط پسند طاقتوں کی ماہیت کو آشکارا کرتی ہیں: رہبر انقلاب اسلامی

 دفاع مقدس کی فلمیں تسلط پسند طاقتوں کی ماہیت کو آشکارا کرتی ہیں: رہبر انقلاب اسلامی

رہبر انقلاب اسلامی نے فرمایا کہ ایسے میں آج کیمیائی ہتھیاروں سے متعلق تہمت لگائی جا رہی ہے اور پروپگنڈہ کیا جا رہا ہے کہ جب ایران پر مسلط کی گئی جنگ کے دوران یورپی ممالک نے صدام کی حکومت کو کیمیائی ہتھیار فراہم کئے تاکہ نہ صرف وہ جنگی محاذ پر بلکہ شہروں منجملہ سردشت شہر پر کیمائی ہتھیاروں سے حملہ کرے۔

اہل بیت(ع) نیوز ایجنسی۔ابنا۔ رہبر انقلاب اسلامی آیت اللہ العظمی خامنہ ای نے فرمایا ہے کہ دفاع مقدس کی فلموں، ثقافتی اور ہنری آثار، مکتوب آثار کے ترجموں اور دفاع مقدس کی یادوں کو اجاگر کئے جانے کی ضرورت ہے تاکہ ایرانی قوم کی مجاہدت و ایمان اور اسی طرح ایرانی قوم کے ناقابل شکست ہونے کا پیغام دنیا تک پہنچایا جا سکے۔

رہبر انقلاب اسلامی آیت اللہ العظمی سید علی خامنہ ای سے بدھ کی شام  دفاع مقدس کے کمانڈروں، جانبازوں اور فنکاروں و ہنرمندوں نے ملاقات کی۔

اس ملاقات میں رہبر انقلاب اسلامی نے دفاع مقدس کو تسلط پسند طاقتوں کے مقابلے میں طاقت کے توازن میں نقشہ راہ قرار دیتے ہوئے فرمایا کہ دفاع مقدس کے مجاہدوں نے اپنے عمل سے انصاف و معنویت سے عاری ایسی وحشی دنیا کی حقیقی تصویر پیش کی جس سے دنیا کے عوام کو بھی واقف کرائے جانے کی ضرورت ہے۔

 آیت اللہ العظمی سید علی خامنہ ای نے جارح اور بعثی دشمن کے مقابلے میں ایرانی قوم کے غیر متوازن و غیر مساوی حالات کی جانب اشارہ کرتے ہوئے فرمایا کہ دفاع مقدس کے دوران ایران کو کم ترین وسائل حتی خار دار تار استعمال کرنے کی  بھی اجازت نہیں تھی لیکن اس کے مقابلے میں ایران کے فریق کو جدید ترین ہتھیاروں حتی کیمیائی ہتھیاروں سے لیس کیا گیا تھا۔

رہبر انقلاب اسلامی نے فرمایا کہ ایسے میں آج کیمیائی ہتھیاروں سے متعلق تہمت لگائی جا رہی ہے اور پروپگنڈہ کیا جا رہا ہے کہ جب ایران پر مسلط کی گئی جنگ کے دوران یورپی ممالک نے صدام کی حکومت کو کیمیائی ہتھیار فراہم کئے تاکہ نہ صرف وہ جنگی محاذ پر بلکہ شہروں منجملہ سردشت شہر پر کیمائی ہتھیاروں سے حملہ کرے۔

آپ نے فرمایا کہ ایران پر اس وقت نہ فقط سیاسی اور اقتصادی پابندی تھی بلکہ ایران پر بیان دینے کی بھی پابندی تھی جس کی وجہ سے ایرانی عوام کی آواز سنائی نہیں دیتی تھی اس لئے کہ صیہونی تسلط کے زیر اثر عالمی ذرائع ابلاغ  ایرانی قوم کے خلاف پروپگنڈہ کر رہے تھے۔

رہبر انقلاب اسلامی نے فرانس اور جرمنی کی جانب سے صدام کی بعثی حکومت کیلئے ہتھیاروں کی امداد و مدد کی جانب اشارہ کرتے ہوئے فرمایا کہ فرانس اور جرمنی کی قوموں کو معلوم ہونا چاہئے کہ ان کی حکومتوں نے آٹھ سالہ جنگ کے دوران ایران  کے خلاف کیا کیا اقدامات کئے۔ آپ نے فرمایا کہ دنیا اب ایرانی قوم کے پاس تسلط پسند نظام کی رسوائی پر مبنی صاف و شفاف تصویر کو نہیں دیکھتی۔

آیت اللہ العظمی سید علی خامنہ ای نے دفاع مقدس کی اہمیت اور گہرے مسائل کی جانب اشارہ کرتے ہوئے فرمایا کہ یورپ کے فلم فسٹیول میں دفاع مقدس کی فلموں سے خوف کی وجہ سے ان فلموں کی نسبت کم کیفیت والی بعض ایرانی فلموں کو  دکھایا جاتا ہے اس لئے کہ دفاع مقدس کی فلمیں تسلط پسند طاقتوں کی ماہیت کو آشکارا کرتی ہیں۔

رہبر انقلاب اسلامی آیت اللہ العظمی سید علی خامنہ ای نے فرمایا کہ جس طرح انقلاب کے آغاز میں سامراجی طاقتوں کی، انقلاب کو شکست دینے کی کوشش ناکام ہوئی اور وہ پسپائی اختیار کرنے پر مجبور ہوئیں اسی طرح اب بھی خدا پر توکل اور عزم و ہمت کے ذریعے اس سازش کو ناکام بنایا بنایا جا سکتا ہے۔

 ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

۲۴۲


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*

haj 2018
We are All Zakzaky
telegram