ٹرمپ نے شام پر پھرفوجی حملہ کرنے کی دھمکی دیدی

 ٹرمپ نے شام پر پھرفوجی حملہ کرنے کی دھمکی دیدی

امریکہ کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ عراق کی طرح شام پر کیمیائی ہتھیاروں کو بہانہ بنا کر ایک بار پھر حملہ کیا جاسکتا ہے۔

اہل بیت (ع) نیوز ایجنسی ۔ ابنا ۔ کی رپورٹ کے مطابق امریکہ کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ عراق کی طرح شام پر کیمیائی ہتھیاروں کو بہانہ بنا کر ایک بار پھر حملہ کیا جاسکتا ہے۔ اطلاعات کے مطابق امریکی صدر نے ایک بار پھر شام کو کیمیائی گیس کے استعمال سے خبردار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر شہریوں پر مزید کیمیائی حملے ہوئے تو امریکہ اپنے اتحادیوں کی مدد سے شام پر دوبارہ میزائل حملہ کرنے میں ذرا بھی دیر نہیں لگائے گا جس کے لیے امریکہ کی تیاریاں مکمل ہیں۔ قبل ازیں اپنی ایک ٹویٹ میں امریکی صدر نے شام پر میزائل حملے کو " کامیاب مشن " قرار دیتے ہوئے اپنے اتحادیوں برطانیہ اور فرانس کا شکریہ ادا کیا۔ امریکہ، برطانیہ اور فرانس کی جانب سے شام پر میزائل حملے کی جہاں امریکہ کے اتحادی ممالک کی حمایت کررہے ہیں وہیں روس نے میزائل حملے کو جارحیت سے تعبیر کیا ہے۔ روس کے سفیر وسیلی نبینزیا نے اتحادی ممالک پر الزام لگایا کہ انھوں نے کیمیائی ہتھیاروں کا معائنہ کرنے والی ٹیم کی دوما میں کیمیائی گیس کے استعمال ہونے کی تحقیقات مکمل ہونے سے پہلے ہی شام پر حملہ کر دیا۔ جو بین الاقوامی قوانین کی کھلی خلاف ورزی ہے۔
ذرائع کے مطابق شام پر حملے کی وجہ سے امریکہ سعودی عرب کے ولیعہد سے مزید دو ارب ڈآلر رقم وصول کرنے کے مجاز ہوگئے ہیں شام پر حملے کے اخراجات سعودی عرب نے ادا کئے ہیں۔ ذرائع کے مطابق امریکہ کیماغي ہتھیارون کو بہانہ بنا کر شام پر پہلے بھی فوجی حملہ کرچکا ہے جبکہ شام میں کیمیائی ہتھیار موجود ہی نہیں ہیں۔

........

/169


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*

haj 2018
We are All Zakzaky
telegram