امریکی صدر کا ایران جوہری معاہدے سے نکلنے کا اعلان/ ایرانی صدر کا فوری رد عمل

امریکی صدر کا ایران جوہری معاہدے سے نکلنے کا اعلان/ ایرانی صدر کا فوری رد عمل

امریکی صدر نے ایران جوہری معاہدے سے نکلنے کی وجہ بیان کئے بغیر کہا کہ امریکہ کے لیے باعث شرمندگی ہے کہ وہ ایران جوہری معاہدے میں باقی رہے۔

اہل بیت(ع) نیوز ایجنسی۔ابنا۔ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے نہایت وقاحت سے اعلان کر دیا ہے کہ امریکہ ۲۰۱۵ میں ہونے والے ایران جوہری معاہدے سے نکل رہا ہے اور ایران کے خلاف نئے سرے سے سخت پابندیاں عائد کی جائیں گی۔
امریکی صدر نے ایران جوہری معاہدے سے نکلنے کی وجہ بیان کئے بغیر کہا کہ امریکہ کے لیے باعث شرمندگی ہے کہ وہ ایران جوہری معاہدے میں باقی رہے۔
انہوں نے اعلان کیا ہے کہ وہ ۲۰۱۵ میں جوہری معاہدے کے تحت اٹھائی جانے والی معاشی پابندیوں کو دوبارہ عائد کریں گے۔
دوسری جانب اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر روحانی نے امریکی صدر کے فیصلے پر فوری رد عمل ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ جوہری معاہدے سے امریکہ کے نکل جانے سے ایک شرپسند موجود کا شر کم ہو گیا ہے۔
انہوں نے کہا کہ امریکہ نے معاہدے کے شروع سے اب تک بھی اس پر عمل نہیں کیا اور آیندہ بھی اس کے نکل جانے سے ایران کو کئی نقصان نہیں پہنچے گا۔
صدر روحانی نے مزید کہا کہ ایران اس وقت تک جوہری معاہدے کی پابندی کرے گا جب تک ایران کا مفاد اس سے وابستہ ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

۲۴۲


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*

پیام امام خامنه ای به مسلمانان جهان به مناسبت حج 2016
We are All Zakzaky
telegram