اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل نے یمنیوں کے قاتل کو خراج تحسین پیش کیا!

اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل نے یمنیوں کے قاتل کو خراج تحسین پیش کیا!

سیکریٹری جنرل اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انٹونیو گوٹیرس نے سعودی ولیعہد کے ساتھ اپنی ملاقات میں ـ ان کے ہاتھوں یمنی عوام پر تین سالہ یلغار اور یمنیوں کے قتل عام اور مسلط کردہ مصائب ـ اقوام متحدہ کو امارات اور سعودی عرب کی ایک ارب ڈالر کی امداد کا شکریہ ادا کیا۔

اہل بیت(ع) نیوز ایجنسی۔ابنا۔ انٹونیو گوٹیرس نے یمنیوں کے قاتل محمد بن سلمان سے بات چیت کرتے ہوئے ان کی طرف سے اقوام متحدہ کو فراہم کردہ امداد کو "انسانی ہمدردی کے منشور کا انسانی جواب" قرار دیتے ہوئے سعودی عرب اور امارات کا شکریہ ادا کیا۔
انھوں نے محمد بن سلمان کے امریکہ اور برطانیہ اور دوسرے ممالک سے کئی سو ارب ڈالر کے ہتھیاروں کے سودے اور ان ہتھیاروں سے یمن کے معصوم عوام پر بمباری کو بھول کر اقوام متحدہ کو ان کی ایک ارب ڈالر کی امداد کا شکریہ ادا کرتے ہوئے وعدہ کیا کہ "میں اگلے ہفتے یمن کے عوام کے لئے سعودیوں کی اس سخاوت کا ضرور تذکرہ کروں گا"۔
انھوں نے گویا محمد بن سلمان کو اسلام نمائندہ قرار دیا اور کہا کہ سخاوت اسلام کے اصولوں میں سے ہے اور میں جب دیکھتا ہوں کہ بعض لوگ اسلام کو منفی انداز سے پیش کرتے ہیں، تو مجھے غصہ آتا ہے!!! (1)
انھوں نے "دو کروڑ بیس لاکھ یمنیوں کے مسائل حل کرنے کے لئے سعودیوں کی کی ایک ارب ڈالر رضاکارانہ امداد کو بہت اہم قرار دیا! (2) اور کہا کہ ہم یمن کے مسائل حل کرنے کے لئے سعودی عرب کے ساتھ تعاون کرنے کے لئے تیار ہیں (3)
یاد رہے کہ چند سال قبل اقوام متحدہ نے سعودی عرب کو "طفل کُش" ممالک کی فہرست میں درج کیا تو اور سابق سیکریٹری جنرل بان کی مون نے ایسی ہی سعودی رشوت لے کر اس کو اس فہرست سے خارج کردیا۔
۔۔۔۔۔۔۔
1۔ اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل اسلامی تعلیمات و احکام کے ماہر کی حیثیت سے دنیا کی رائے عامہ کو اسلامیات پڑھا رہے ہیں!
2۔ سوال یہ ہے کہ یمن کے عوام کو مصائب میں مبتلا کس نے کیا؟ کیا سعودی عرب نے مغرب سے سینکڑوں ارب ڈالر کا اسلحہ خرید کر یمنی کی اینٹ سے اینٹ نہیں بجائی؟ کیا ایک ارب ڈالر کی امداد تباہ شدہ یمن کی تعمیر، بمباریوں کے نتیجے میں ہزاروں یمنیوں کے قتل عام، بیماریوں کے نتیجے میں ہزاروں دیگر کی موت اور جنگ اور غربت کے نتیجے میں لاکھوں یمنیوں کی دربدری کا ازالہ کرسکتی ہے؟ کیا یہ سب کچھ اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل کو نہیں دکھائی دے رہا یا پھر وہ سمجھ رہے ہیں کہ وہ دنیا کی رائے عامہ کی آنکھوں میں دھول جھونک سکتے ہیں؟
3۔ گویا یمن پر سعودیوں نے حملہ ہی نہیں کیا ہے اور یمنیوں کو خلائی مخلوقات قتل کررہی ہیں اور جناب ولیعہد تو بس وہاں امن چاہتے ہیں اور جو جہاز سعودی عرب سے اڑ کر یمنیوں کے مصائب میں اضافہ کررہے ہیں، چنانچہ اب سیکریٹری جنرل صاحب کو یمن کے مسائل حل کرنے کے لئے سعودی ولیعہد کے ساتھ تعاون کریں گے؟؟؟
۔۔۔۔۔۔۔۔۔

۱۱۰


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*

Mourining of Imam Hossein
haj 2018
We are All Zakzaky
telegram