ڈیرہ اسماعیل خان میں دہشتگردوں کی فائرنگ سے ایک اور شیعہ مسلمان شہید، انتظامیہ خاموش

ڈیرہ اسماعیل خان میں دہشتگردوں کی فائرنگ سے ایک اور شیعہ مسلمان شہید، انتظامیہ خاموش

ڈیرہ اسماعیل خان شیعہ مسلمانوں کی مقتل گاہ بن گیا ہے جہاں ہر دوسرے روز کالعدم تکفیری جماعت کے دہشتگرد شیعہ مسلمانوں کو سرعام قتل کررہےہیں لیکن پولیس انتظامیہ قاتلوں کو گرفتار کرنے میں ناکام ہے۔

اہل بیت(ع) نیوز ایجنسی ۔ ابنا ۔ کی رپورٹ کے مطابق ڈیرہ اسماعیل خان کے علاقہ محلہ شاہین میں داعش کے پاکستانی دھڑے کالعدم سپاہ صحابہ کے دہشت گردوں نے علیٰ الصبح فائرنگ کرے امام بارگاہ محلہ شاہیں کے متولی موتی اللہ عرف موتی کو شہید کردیا ہے۔

واضح رہے کہ کچھ دنوں قبل ہیں ڈی آئی خان میں ہی جوان سالہ حسن علی کو دہشتگردوں نے قتل کیا تھا جسکے قاتلوں کی گرفتاری کے لئے ابھی احتجاج جاری ہی تھا کہ دہشتگردوں نے امام بارگاہ پر فائرنگ کرکے پیغام دیا ہے کہ عمران خان کے نئے پاکستان میں کالعدم تکفیری دہشتگرد پولیس اور قانون نافذ کرنے والے اداروں سے زیادہ طاقت ور ہیں۔

.......

/169


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*

haj 2018
We are All Zakzaky
telegram