مصرکے سرکاری اداروں میں خواتین کے نقاب پر پابندی

مصرکے سرکاری اداروں میں خواتین کے نقاب پر پابندی

الجزائر میں سرکاری اداروں اوردفاتر میں نقاب پر پابندی کے فیصلے کے بعد مصر میں بھی سرکاری دفاتر میں خواتین کے نقاب پر پابندی کی مہم شروع ہو گئی ہے۔

اہل بیت (ع) نیوز ایجنسی ۔ ابنا ۔ کی رپورٹ کے مطابق مصر کے ایک سرکردہ رکن پارلیمنٹ محمد ابو حامد نیپارلیمنٹ میں ایک بل پیش کیا ہے جس میں سرکاری دفاتر میں خواتین کے نقاب پر پابندی کا مطالبہ کیا گیا ہے۔ پارلیمنٹ میں پیش کردہ مطالبے میں کہا گیا ہے کہ سرکاری تعلیمی اداروں، ہسپتالوں اور ریاست کے تمام دیگر اداروں میں کام کرنے والی خواتین کے لیے نقاب پر پابند عائد کی جائے۔ عرب ٹی وی سے بات کرتے ہوئے نقاب پر پابندی کی تجویز کے بارے میں محمد ابو حامد نے کہا کہ انہوں نے دیگر ارکان سے بھی بات کی ہے۔ نقاب کی وجہ سے سرکاری اداروں اور دفاتر میں لوگوں کو مشکلات کا سامنا رہتا ہے۔ نیز نقاب کی وجہ سے امن وامان کے مسائل بگڑتے اور معاشرتی مشکلات جنم لیتی ہیں۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ مصر کے دارالافتاء اور جامعہ الازھر کی طرف سے بھی نقاب کے حوالے سے واضح موقف سا منے آچکا ہے۔

.......

/169


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*

haj 2018
We are All Zakzaky
telegram