ایران اور چین کے درمیان 10 ارب ڈالر کے معاہدے پر دستخط

ایران اور چین کے درمیان 10 ارب ڈالر کے معاہدے پر دستخط

اسلامی جمہوریہ ایران اور چین نے 10 ارب ڈالر کے معاہدے پر دستخط کر دئے ہیں جسے ایران کے مرکزی بینک کے سربراہ نے دوطرفہ تعلقات کو مزید فروغ دینے کے لئے ایک اہم سنگ میل قرار دے دیا.

اہل بیت(ع) نیوز ایجنسی۔ابنا۔ اسلامی جمہوریہ ایران اور چین نے 10 ارب ڈالر کے معاہدے پر دستخط کر دئے ہیں جسے ایران کے مرکزی بینک کے سربراہ نے دوطرفہ تعلقات کو مزید فروغ دینے کے لئے ایک اہم سنگ میل قرار دے دیا.

تفصیلات کے مطابق، چین اور ایران نے ایک تعاون کے معاہدے پر دستخط کئے ہیں جس کے چین کے 'اسٹیک گروپ' پانچ ایرانی بینکوں کو کریڈٹ لائن کی شکل میں 10 ارب ڈالر فراہم کرے گا.

معاہدے کے تحت چینی فریق ایران کے 'رفاہ کارگران، صنعت و مائن، پارسیان، پاسارگاد اور ایکسپورٹ ڈیولپمنٹ' بینکوں کو کریڈٹ لائن کی شکل میں مالی ضروریات فراہم کرے گا.

چین کا اسٹیک گروپ دنیا کے مشہور مالی اداروں میں شامل ہے جس کی پوزیشن دنیا کی 500 مالیاتی کمپنیوں میں سے 51واں نمبر پر ہے.

ایران کے مرکزی بینک کے سربراہ 'ولی اللہ سیف' جو اس معاہدے پر دستخط کرنے کی تقریب میں شریک تھے، نے کہا کہ 10 ارب ڈالر کے معاہدے یہ بات ظاہر ہوتی ہے کہ دونوں ممالک باہمی تعلقات کے فروغ کے لئے پُرعزم ہیں.

انہوں نے مزید کہا کہ ایران،چین تعلقات نہ صرف تاریخی اور دیرپا ہیں بلکہ اس معاہدے کے ذریعے دونوں ممالک کے درمیان اسٹریٹیجک تعلقات کو مزید مضبوط کرنے کے لئے مدد ملے گی.

ولی اللہ سیف نے کہا کہ مشترکہ اقتصادی اور تجارتی سرگرمیوں کے فروغ بشمول بینکاری لین دین کو وسعت دینے سے دوطرفہ تعلقات بھی مضبوط ہوں گے.

نائب ایرانی وزیر خزانہ 'محمد خزاعی' نے بھی اس تقریب کے موقع پر کہا کہ اسٹیک گروپ کے ساتھ طے پانے والا معاہدہ، ایٹمی سمجھوتے کے بعد چین کے ساتھ ہونے والا سب سے بڑا معاہدہ ہے.

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

۲۴۲


اپنی رائے بھیجیں

آپ کا ای میل شائع نہیں ہو گا۔ * والی خالی جگہوں کو مکمل کیجیے

*

Mourining of Imam Hossein
haj 2018
We are All Zakzaky
telegram